حکومت پیپرس کی وجہ سے نجی تعلیمی اداروں میں پانی جانے والی بے چینی کو ختم کرنے کیلئے فوری اقدامات کرے،راجہ الیاس

راولپنڈی ( نمائندہ خصوصی) حکومت پیپرس کی وجہ سے نجی تعلیمی اداروں میں پانی جانے والی بے چینی کو ختم کرنے کے لیے فوری اقدامات کرے، پیپرس کی وجہ سے رجسڑڈ پرائیویٹ سکول ابہام کا شکار ہیں، نجی تعلیمی اداروں کے لیے آسانیاں پیدا کرنے کی آڑ میں ایک سال کے لئے ای لائسنس جاری کرنا خلاف قانون ہے، پیپرس بحیثیت ڈیٹا بیس قابل قبول ہے، تمام نجی تعلیمی اداروں کو ایک ہی بار ای لائسنس جاری کیا جائے، ان خیالات کا اظہار آل پاکستان پرائیویٹ سکولز اینڈ کالجز ایسوسی ایشن صوبہ پنجاب کے صدر راجہ محمد الیاس کیانی نے ڈویژنل صدر عرفان مظفر کیانی ،صدر تحصیل کہوٹہ ملک عرفان ،چوہدری بابر ،سے ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ حکومت نے تعلیمی سال اگست سے شروع کرنے کا فیصلہ کر کے اگلے تعلیمی سال کو ضائع کرنے کی منصوبہ بندی کر لی ہے، حکومتی اقدامات نے شعبہ تعلیم کو تباہ کر دیا حکومت قوم کے نونہالوں کا نیا تعلیمی سال ضائع ہونے سے بچانے کیلئے اپریل سے نیا تعلیمی سال شروع کرنے کا اعلان کرے، میڑ ک ایف اے ایف ایس سی کے امتحانات مئی جون میں منعقد کرنے کے حامی ہیں وزیراعظم پاکستان جناب عمران خان شعبہ تعلیم کو بچانے کا فوری نوٹس لیں۔

متعلقہ خبریں